ایتھنز میں جعلی ڈرائیونگ لائسنس بنانے والا گروہ گرفتار وزارت ٹرانسپورٹ کے ملازم ملوث۔

  • 674
  •  
  •  
  •  
  •  
    674
    Shares

جنوبی ایتھنز کے وزارت ٹرانسپورٹ میں ایک بہت بڑا سکینڈل سامنے آیا ہے جس میں وزارت ٹرانسپورٹ کے ملازم اور ڈرائیونگ سکھانے والے سکولوں کے کچھ افراد شامل ہیں یہ لوگ پیسے لے کر جعلی ڈرائیونگ لائسنس بناتے تھے۔

پولیس کے مطابق پچھلے ایک سال سے اس گروہ کو پکڑنے کی کوشش کی جارہی تھی جس میں اب کامیابی ملی ہے۔ اور پولیس نے نو افراد کو گرفتار کرلیاہے۔ گرفتار ہونے والے نو افراد میں 7وزارتیں ٹرانسپورٹ کے ملازم ہیں اور دو ڈرائیونگ سکھانے والے سکولوں کے استاد شامل ہیں۔

یہ گروہ لوگوں سے 1500 سے 2500یورو تک وصول کرتے اور انہیں بغیر امتحان دیے ہی پاس کروا دیتے پولیس کے مطابق گروہ میں شامل کچھ افراد نہایت ہی شاہانہ انداز میں زندگی گزار رہے تھے جس کی وجہ سے ان پر شک کیا جا رہا تھا۔

ایتھنز کے جنوبی حصے میں وزارت ٹرانسپورٹ کو بند کر دیا گیا ہے تاکہ پولیس کو اپنی تحقیقات کرنے میں آسانیاں فراہم کی جائیں اور نوٹیفکیشن جاری کیا گیا ہے کہ جو لوگ ایتھنز کے جنوبی حصے والے وزارتِ ٹرانسپورٹ میں کسی بھی کام کی غرض سے جانا چاہتے تھے وہ دوسری شاخوں میں جاکر اپنے کام کروا سکتے ہیں۔

کچھ عرصہ پہلے اسی قسم کا ایک واقعہ پیریفیریا پیر یوس میں بھی پیش آیا تھا جب پولیس نے وہاں سے کچھ افراد کو گرفتار کیا گیا کیا تھا جو اس قسم کے کاموں میں ملوث تھے۔

پولیسکے کچھ ذرائع کا کہنا ہے کہ غیر قانونی اور جعلی ڈرائیونگ لائسنس بنانے والا گروہ پچھلے 4 سے 5 سال سے اس کام کو جاری رکھے ہوئے تھا اور کئی لوگوں نے پیسے دے کر لائسنس بنوا رکھے ہیں۔اس گروہ کی گرفتاری کے بعد امید ظاہر کی جا رہی ہے کہ اس غیر قانونی کام کو بند کرنے میں مدد ملے گی۔


  • 674
  •  
  •  
  •  
  •  
    674
    Shares

اترك تعليقاً

This site is protected by wp-copyrightpro.com