ایتھنز کے سینٹر میں غیرملکیوں کے حق میں ریلی۔

  • 99
  •  
  •  
  •  
  •  
    99
    Shares

ریلی ایتھنز یونیورسٹی سے شروع ہوئی اور ایتھنز کے سینٹر سے ہوتی ہوئی وزارت خارجہ تک پہنچی۔

ایتھنز پر نازی فوجوں کے قبضے کو 74 سال مکمل ہونے پر یہ ریلی نکالی گئی جس کے شرکاء نے بینرز اٹھا رکھے تھے جن پر لکھا ہوا تھا کہ فاشزم،نسل پرستی،اور جنگ کبھی نہیں۔

ریلی کے شرکاء جب وزارت خارجہ پہنچے تو انہوں نے امریکن جھنڈا بھی نذر آتش کیا اس موقع پر شرکاء نے ریلی سے خطاب بھی کیا جن کا کہنا تھا کہ 74 سال پہلے آزاد ہونے والا ایتھنز اب کبھی بھی  نازی افواج کو برداشت نہیں کرے گا ۔معاشرے سے نسل پرستی ختم کی جائے اور جنگ میں جانے کی بجائے میز پر بیٹھ کر مسائل کا حل تلاش کیا جائے۔

شرکاء کا مزید کہنا تھا کہ غیر ملکیوں کے حوالے سے “سیریزا” اور اس کے شراکت داروں کی پالیسیاں نامناسب ہیں ہر انسان کو برابری کی بنیاد پر حقوق ملنے چاہیئے۔

اس کے علاوہ یورپ میں غیر ملکیوں کے لیے امیگریشن پالیسیز کو بھی تنقید کا نشانہ بنایا گیا اور جنگ سے متاثرہ افراد کو برابری کی بنیاد پر بنیادی حقوق دینے پر زور دیا گیا۔

یونان کے” گولڈن ڈان”نامی جماعت کو بھی نشانہ بنایا گیا اور ان سے کہا گیا کہ وہ آپنا رویہ جو کہ غیر ملکیوں کے لیے نامناسب ہے اس پر غور کریں اور ہر انسان کو انسان سمجھیں۔


  • 99
  •  
  •  
  •  
  •  
    99
    Shares

اترك تعليقاً

This site is protected by wp-copyrightpro.com