ایسا بھی ہوتا ہے یونان میں: دیمو س نے چار سال پہلے مرنے والے شخص کی زمین پر بقایا جات کے لئے قبضہ کر لیا۔

  • 115
  •  
  •  
  •  
  •  
    115
    Shares

تفصیلات کے مطابق” فتیو تیدا” کے ایک گاؤں میں دیموس نے چار سال پہلے فوت ہو جانے والے شخص کی زمین پر یہ کہہ کر قبضہ کرلیا کہ مرنے والا شخص  کے ذمے بارہ ہزار یورو بقایاجات تھے جو اس نے ادا نہیں کیے۔

یہ یونان کی تاریخ کا منفرد واقعہ ہے جب کسی مرنے والے شخص کی زمین پر چار سال بعد یہ کہہ کر قبضہ کیا جائے کہ مرحوم کے ذمہ بارہ ہزار یورو بقایاجات تھے۔

اس حوالے سے مرحوم کے خاندانی وکیل” نیکاس “کا کہنا ہے کہ یہ اقدام قانون کی خلاف ورزی ہے اور دیموس سے اگر پوچھا جائے تو انہوں نے قبضے کے کاغذات کس شخص کو دکھائے ایسا تو ہو نہیں سکتا کہ انہوں نے قبر کھود کر مرنے والے شخص کو کاغذات دکھائے ہوں کہ ہم تمہاری زمین پر اس لیے قبضہ کر رہے ہیں کہ تمہارے ذمے بارہ ہزار یورو قرض تھا۔

اور اگر دیموس نے ایسا نہیں کیا تو پھر اس طرح زمین پر قبضہ کرنا غیرقانونی اور غیر اخلاقی اقدام ہے۔

نیکاس کا مزید کہنا تھا کہ دیموس کو اس سوال کا جواب جلد سے جلد دینا چاہیے کہ انہوں نے قبضہ کرنے کے لئے کاغذات کس شخص کو دکھائے ہیں تاکہ اگلی کارروائی کی جا سکے۔

جب دیموس کے نمائندگان سے اس بارے میں پوچھا گیا تو ان کا موقف یہ تھا کہ اس لیے کے فوت ہونے والے شخص کے ذمے بارہ ہزار یورو بقایاجات تھے اس لئے اس شخص کی زمین پر قبضہ کیا گیا ہے کہ اسے بیچ کر یہ بقایاجات پورے کیے جائیں گے۔


  • 115
  •  
  •  
  •  
  •  
    115
    Shares

اترك تعليقاً

This site is protected by wp-copyrightpro.com