یورپین یونین نے کھلے سمندروں میں مہاجرین کو دی جانے والی امداد بند کردی۔

  • 377
  •  
  •  
  •  
  •  
    377
    Shares

یورپین یونین نے کھلے سمندروں میں غیر قانونی طور پر یورپ آنے والے مہاجرین کے لیے کیا جانے والا ریسکیو آپریشن بند کرنے کا اعلان کردیا۔

اس مقصد کے لئے ایک بحری جہاز تعینات کیا گیا تھا جو ہر وقت کھلے سمندروں میں مہاجرین کی مدد کے لیے تیار رہتا تھا اور کئی ہزار زندگیاں بچا چکا تھا لیکن اٹلی کی طرف سے احتجاج کرنے کے بعد اس بحری جہاز کو واپس بلا لیا گیا ہے اور ریسکیو آپریشن بند کرنے کا باقاعدہ اعلان کردیا گیا ہے۔

ریسکیو آپریشن بند کرنے کے بعد اب 30 اپریل کے بعد صرف فضائی نگرانی کی جائے گی اور اگر کسی جگہ پر ممکن ہو سکا  تو مہاجرین کو فضائی مدد فراہم کی جائے گی۔

واضح رہے کہ اٹلی نے غیر قانونی طور پر یورپ میں داخل ہونے والے مہاجرین کی ایک بہت بڑی تعداد کو اپنے ملک میں داخل ہونے کی اجازت دی تھی اور ان کو بہت سی سہولیات بھی فراہم کی گئی تھیں لیکن اب اٹلی میں برسراقتدار پارٹی کی جانب سے غیرقانونی طور پر اٹلی میں داخل ہونے والے مہاجرین کی حوصلہ شکنی کی جا رہی ہے اور اس سلسلے میں دی جانے والی سیاسی پناہ کو بھی بند کر دیا گیا ہے۔

اس سلسلے میں مہاجرین کو سب سے زیادہ سیاسی پناہ جرمنی میں دی گئی جہاں لگ بھگ ڈھائی ملین مہاجرین کو پناہ دی گئی لیکن اب یورپین یونین کی جانب سے مزید سیاسی پناہ نہ دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے اور کھلے سمندروں میں ریسکیو آپریشن کو بھی بند کیا جا رہا ہے۔


  • 377
  •  
  •  
  •  
  •  
    377
    Shares

اترك تعليقاً

This site is protected by wp-copyrightpro.com