یونان میں پناہ گزینوں کا حال بہت خستہ ہے :یونیسیف

  • 88
  •  
  •  
  •  
  •  
    88
    Shares

پناہ گزینوں کے بارے میں سالانہ رپورٹ شائع کرتے ہوئے یونیسیف نے کہا ہے کہ یونان میں پناہ گزینوں کی حالت بہت خستہ ہے اور یونان میں موجود پناہ گزین کیمپوں میں بہت زیادہ بہتری کرنے کی ضرورت ہے۔

تفصیلات کے مطابق یونیسیف نے کہا ہے کہ یونان میں اس سال000 26 پناہ گزین داخل ہوئے جن میں سے بہت زیادہ پناہ گزین اس وقت کسمپرسی کی زندگی گزار رہے ہیں. اگر جائزہ لیا جائے تویونان کا مشہور زمانہ کیمپ موریہ جہاں پر 3000 پناہ گزینوں کے رہنے کی گنجائش تھی وہاں اس وقت 7000 پناہ گزین رہائش پذیر ہیں اور موریہ کیمپ میں سہولیات کا فقدان ہے۔صفائی کا بھی کوئی نظام نہیں ہے پناہ گزینوں مختلف بیماریوں کا شکار ہو رہے ہیں اور کوئی بھی ڈاکٹر وہاں جانے کے لئے تیار نہیں ہے۔

اور یونان میں موجود دوسرے پناہ گزین کیمپوں کی حالت بھی اس سے زیادہ مختلف نہیں ہے یونیسیف نے اقوام متحدہ، یورپی یونین کے دوسرے ممالک اور یونان حکومت پر زور دیا ہے کہ وہ تمام تر وسائل بروئے کار لاتے ہوئے پناہ گزینوں کے مسائل کو حل کرنے کی کوشش کریں۔

یہاں پناہ گزینوں میں زیادہ تعداد ان لوگوں کی ہے جنہیں اپنے ممالک میں جنگ کا سامنا تھا اور کچھ لوگ قحط سالی اور غربت کی وجہ سے اپنے اپنے ملکوں کو چھوڑ کر ایک بہتر مستقبل کی خاطر یورپ میں داخل ہوئے۔

لیکن ان میں سے اکثر کا یہ کہنا ہے کہ یورپ میں داخل ہونے اور کیمپوں میں رہنے کے بعد پتہ چلا کہ یہاں زندگی اتنی آسان نہیں ہے جتنے ہم خواب لے کر یہاں آئے تھے ابھی واپس جانا تو تقریبا ناممکن ہے لیکن اچھے مستقبل کے لیے بہت زیادہ محنت اور قسمت کی ضرورت ہوگی۔

پناہ گزینوں کے حوالے سے سالانہ رپورٹ میں یونیسیف نے زور دیا کہ تمام متعلقہ ممالک پناہ گزینوں کے مسائل کو حل کرنے کی طرف فوری توجہ دیں۔


  • 88
  •  
  •  
  •  
  •  
    88
    Shares

اترك تعليقاً

This site is protected by wp-copyrightpro.com