ترک صدر کی یونان کو وارننگ۔

ترکی کے صدر طیب اردگان نے کہا ہے کہ بحرہ روم میں ترکی کے حقوق کو تسلیم کئے بغیر کوئی بھی ملک اپنی اجارہ داری قائم نہیں کرسکتا۔

ترکی میں افواج سے خطاب کرتے ہوئے طیب اردگان نے کہا کہ ترکی کے بغیر بحرہ روم اور ایجین سمندر کے وسائل کو استعمال کرنے والے ممالک نے دیکھ لیا کہ انہوں نے غلطی کی۔

طیب اردوغان نے کہا کہ ترکی کسی بھی ملک کے اندرونی معاملات میں مداخلت نہیں کرتا نہ ہی کسی ملک کے وسائل پر قبضہ کرنا چاہتا ہے لیکن ترکی اپنے وسائل اور اپنے لوگوں کی حفاظت ہر صورت میں کرے گا اور ترک افواج ہر موقع پر اپنے ملک کی حفاظت کرنے کے لئے تیار ہیں۔

انہوں نےمزید کہا کہ سائپرس نے بحرہ روم سے تیل نکالنے کے لیے جو کوششیں کی اسے ان کوششوں کو ہم کبھی بھی کامیاب نہیں ہونے دیں گے کیونکہ بحیرہ روم کے تیل پر ترکی کے زیر اثر سائپرس کا بھی اتنا ہی حق ہے۔

ترک افواج سے خطاب میں طیب اردگان نے مزید کہا کہ ترکی ہمسایہ ممالک کے ساتھ اچھے روابط رکھنا چاہتا ہے لیکن ساتھ ہی ساتھ ترکی کے حقوق کی حفاظت بھی کی جائے گی۔

جواب دیں

This site is protected by wp-copyrightpro.com