اسامہ بن لادن مرنے سے بہت پہلے سے پاکستان میں رہ رہا تھا:ٹرمپ

امریکن صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے آج اپنے ٹویٹ میں کہا کہ اسامہ بن لادن مرنے سے بہت پہلے سے پاکستان میں رہ رہا تھا اور اس بات کا حکومت پاکستان کو بہت پہلے سے علم تھا مگر انہوں نے امریکہ کو انفارم نہیں کیا۔

ٹرمپ کا مزید کہنا تھا کہ امریکہ نے پاکستان کو اربوں ڈالر دیئے تاکہ وہ دہشت گردی کی جنگ میں امریکہ کی مدد کریں مگر انہوں نے اپنے حصے کا کام نہیں کیا۔

ٹرمپ کے ٹوئٹ کا جواب دیتے ہوئے وزیراعظم پاکستان عمران خان نے کہا کہ پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان نے پوری دنیا سے زیادہ قربانیاں دیں اس جنگ میں 75 ہزار پاکستانی شہید ہوئے اور پاکستان کا نقصان 123 ارب ڈالر تھا جس کا ایک بہت چھوٹا سا حصہ امریکہ نے اسے مدد کی صورت میں دیا جو کہ 20 ارب ڈالر تھا۔

عمران خان کا مزید کہنا تھا کہ امریکا کو افغانستان میں شکست کی وجہ ڈھونڈنی چاہیے جہاں امریکن فوج اور نیٹو کی فوج بری طرح سے شکست کھا چکی ہیں اور امریکہ کو ملبہ پاکستان پر نہیں ڈالنا چاہیے۔

یورپی یونین اور چائنہ کی جانب سے پہلے ہی پاکستان کی قربانیوں کو سراہا گیا ہے جو اس نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں دیں۔

دنیا کے بیشترممالک یورپی یونین ،روس اور چائنہ نے امریکہ پر زور دیا ہے کہ افغانستان میں جنگ کی شکست کا ملبہ پاکستان پر ڈالنے کے بجائے حقائق کو سامنے رکھتے ہوئے اس بات کا تعین کیا جائے کہ افغانستان میں شکست کیوں ہوئی۔اور اس حوالے سے عمران خان کے بیان کو کافی سراہا جا رہا ہے۔

جواب دیں

This site is protected by wp-copyrightpro.com