ترکی اور امریکہ کی جنگ۔

ترکی اور امریکہ کے درمیان حالیہ لفظی جنگ سے ترکی کی معیشت پر بہت برا اثر پڑ رہا ہے اور ہر آنے والے دن کے ساتھ ترکی کی کرنسی لیرا نیچے جارہا ہے۔

آج لیرے کے قدر میں تاریخ ساز کمی کے بعد اسکی قیمت ایک ڈالر کے مقابلے میں 7.2362 پر پہنچ چکی ہے۔ امریکن صدرڈونلڈ ٹرمپ نے ترکی کی مصنوعات پر ٹیرف میں اضافہ کرکے ترکی کی برآمدات کو شدید متاثر کیا ہے۔

ترک صدر رجب اردوگان نے اپنی قوم سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ ترکی ہر قسم کے حالات کا مقابلہ کرنے کے لیے تیار ہے اور صنعت کاروں سے مخاطب ہوتے ہوئے کہا ہے کہ وہ اپنے اپنے شعبے میں پروڈکشن جاری رکھیں اور ترکی ان حالات سے بہت جلد نکل جائے گا۔

اس موقع پر اردوگان کا کہنا تھا کہ ہم سب محب وطن  ہیں اور ہم مل کر ترکی کو اس مشکل سے نکالنے میں کامیاب ہو جائیں گے ۔

ترکی میں بینکوں پر کیپیٹل کنٹرول لگانے کے بارے میں بھی سوچا جا رہا ہے لیکن ابھی تک یہ کنٹرول لاگو نہیں کیا گیا ۔

کیپٹل کنٹرول کا مطلب ہوتا ہے کہ لوگ اپنے اکاؤنٹ سے غیر ملکی کرنسی کو نہ نکال سکیں یا ایک محدود مقدار میں نکال سکیں۔

جواب دیں

This site is protected by wp-copyrightpro.com